5 Comments

  • jakhan December 19, 2010 2:08 am

    اندازہ کرو جو لوگ سٹار پلس کے ڈرامے دیکھتے ہیں جو تمام کے تمام ایک جیسے ہوتے ہیں صرف ڈرامے کے کرداروں کے نام کبھی کبھی مختلف ہوتے ہیں بھلا ان کو کیا پتہ کہ پاکستانی کلاسک ڈرامہ کیا ہوتا ہے جس کی کہانی شاندار ،اداکاری شاندار ،ہدایتکاری شاندار اور یہ نہیں کہ ابھی نہیں بن رہے اگر پی ٹی وی میں اب بھی دیکھیں تو ایک ادھ ڈرامہ چل رہا تھا جو بہتر ہے کم از کم ان ڈراموں سے جن کی تقلید ہمارے اور چنیل کر رہے ہیں جیو پر دیکھ لو جیسے سٹار پلس ٹو ہو، حالانکہ ہمارے ڈراموں کا مقابلہ کوئی نہیں کر سکتا ،امریکا اورا یران کے علاوہ میں نے کسی اور ملک کا اچھا ڈرامہ نہیں دیکھا یقین مانیں اگر امریکا کا ،ا یران کا ڈرامہ دیکھو گے تو اکثر ایسے لگے گا جیسے پاکستانی ڈرامے کی کاپی چل رہی ہو امریکا اور ایران کا ڈرامہ اکثر قسطوار نہیں ہوتا بعض اوقات دو تین گھنٹوں کا اور کم سے کم ڈیڑھ دو گھنٹوں کا مگر ہمارے ڈرامے کی کئی قسطیں ہوتی ہیں ایک سے بڑھ کر ایک قسط کاش ہم ہمارے ڈرامے کو اسی شکل میں زندہ رکھیں جو پاکستان بننے کے بعد سے تھا جس کا کوئی توڑ نہیں
    آخر میں ذکر ایک عام فلموں اور آرٹ فلموں کے بادشاہ نصیر ا لد ین شاہ کے الفاظ کا کروں گا جو انہوں نے بلا جھجک ہندوستانی ٹی وی پر کہے وہ یہ کہ ان سے پوچھ لیا گیا ڈرامے کے متعلق تو انہوں نے کہا کہ انڈیا میں ڈرامہ نہیں بنتا اور نہ کوئی ڈرامہ بنا سکتا ہے مگر جو ڈرامے پاکستان کے بنتے ہیں ان کا کوئی سا نی نہیں جو ہر پہلو سے ایک مکمل ڈرامہ ہوتا ہے

  • hypocrite December 19, 2010 2:22 am

    Great discussion.

    I wish if Hassan Nisar sahib doesnt interrupt frequently and doesnt present himself as the most knowledgable and eloquent, at all times. No doubt he has good knowledge, clear view point and he takes stand but still he shall not portray himself as an egostic person.

    The world continiously changes. What happened in 50s, 60s 70s and 80s was different then what happened in last century or in early 20s. The taste and the requirements have changed though it seems the change is being caused by materialistic approach.

    Unfortunately in Pakistan, the whole focus is on making quick money and it has affetced all walks of life includingmedia, art, sports, movies, songs and culture etc. Shameful and pathetic but we all have contributed to it..

    Hassan Nisar sahib had a jab on Haroon Rasheed sahib. lets see how Haroon Rasheed sahib comes back.

  • Mugal December 19, 2010 2:06 pm

    waste of time,aurton ki trah sab ki buraiayan kar rahay hain,aur yah self mad hassan nisar to bhat hi ghatiya banda hai,shame on u

  • بلیک شیپ December 21, 2010 9:13 am

    پروگرام واقعی اچھا تھا اگر حسن نثار تھوڑی بھنگ پی کر آجایا کرے تو اور بھی بہتر ہوسکتا ہے۔
    اچھا لگا یہ دیکھ کر کہ فردوس جمال صرف ایک اچھا اداکار ہی نہیں بلکہ اچھی سوچ رکھنے والا بندہ بھی ہے۔
    حسن نثار کے ساتھ مسئلہ یہ ہے کہ معلومات تو اس کے پاس بہت ہے اور چیزوں کو دیکھنے کے زاویہ بھی پر اخلاق کا شدید قحط ہے۔
    خیر قحط تو ملک کے ہر شعبہ میں ہوتا جا رہا ہے۔۔۔۔۔ اور اگر ایسا ہی چلتا رہا تو ۔۔۔

    ہماری داستاں تک بھی نہ ہوگی داستانوں میں۔۔۔

  • saif December 25, 2010 3:47 am

    They were talking about Mirch Masala in news and themselves were talking like Bi Jamalo.They were talking about talent but host (Qasmi,s son) himself is a Sifarshi,what he has talent ? only that he is a Qasmi,s son ?Firdos Jamal is a good person and had knoldge.

Add Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *