April 7, 2013
Tweets of the Day

51 Comments

  1. Bawa says:

    Nadeem F. Paracha @NadeemfParacha

    ROs should reject the papers of all those politicians who quote Jinnah & Iqbal. Both loved their Scotch. Only Maududi should be quoted.

    .
    .

    سیکولرزم اور لبرلزم کے ماموؤں کا قائد اعظم اور علامہ اقبال کے خلاف بھونکنا بہت پرانا اور لا علاج مرض ہے

    نہ تو ہی قائد اعظم اور نہ ہی علامہ اقبال شراب پیتے تھے – یہ ایک حقیقت ہے

    کسی کے بڑا سا منہ کھول کر بھونکنے سے حقیقت بدل نہیں جاتی

  2. Bawa says:

    Raza Rumi @Razarumi

    Shah Mahmood Qureshi trying to play the Bhutto card while in PTI and contesting as an independent candidate.

    .
    .

    الیکشن کا اعلان ہوتے ہی بابے نیازی اور اسکے “نوے لاکھ ووٹوں” سے منتخب انقلابیوں کو اپنی اوقات نظر آنا شروع ہو گئی ہے

    کبھی مسلم لیگیوں کے ووٹ لینے کے لیے پیر پگاڑہ کے پاؤں پکڑے جا رہے ہیں، کبھی پی پی پی کے ووٹ حاصل کرنے کی غرض سے بھٹو کی برسی منسوخ کرنے پر اعتجاج کیا جا رہا ہے، کبھی طاہرالقادری کو دھرنوں کا فیصلہ واپس لے کر انکی حمایت کرنے کی اپیلیں کی جا رہی ہیں اور کہیں اسی ایم کیو ایم کو اپنی نظریاتی جماعت ہونے کے پیغام بھیج کر الطاف حسین کو دو سو سنتیس لوگوں کا قاتل کہنے کے بیان پر معافیاں مانگی جا رہی ہیں

    دیکھتے جائیے – آنے والے دنوں میں “انقلاب” کے کتنے رنگ سامنے آتے ہیں

  3. Bawa says:

    [img]http://qusra.net/portal/wp-content/uploads/2011/10/sadaq.jpg[/img]
    [img]http://jang.com.pk/jang/apr2013-daily/07-04-2013/updates/4-7-2013_142293_1.gif[/img]

  4. Bawa says:

    خاتون صحافی نے لبرلزم کے ماموں نجم سیٹھی کے منہ پر تھوک دیا

    😀 😀 😀 😀
    .
    .

    [img]http://www.express.com.pk/images/NP_LHE/20130408/Sub_Images/1101808698-1.gif[/img]

  5. A L i Ch says:

    بریکنگ نیوز: سپریم کورٹ نے پرویز مشرف کے خلاف غداری کا مقدمہ چلانے کا کیس سماعت کے لئے منظور کر لیا گیا ہے ۔ تحریری حکم نامہ جاری ۔ ۔ ۔

  6. A L i Ch says:

    بریکنگ نیوز: پرویز مشرف کا نام ای سی ایل میں ڈال کر تمام ائیر پورٹس اور بندگارہوں کو حکم نامہ جاری کر دیا گیا

    • Bawa says:

      و علیکم السلام علی بھائی

      مشرف کا کچھ نہیں بنے گا کیونکہ وہ بدمعاشوں کا آدمی ہے اور سابقہ بدمعاش ہے. کسی کی اتنی جرآت نہیں ہے کہ بدمعاشوں کے بندے پر ہاتھ ڈال لے. یہ سب وقتی دکھاوا ہے

  7. Bawa says:

    علی بھائی

    ویسے میں آپ سے سخت ناراض ہوں. آپ نے مجھے بتایا ہی نہیں کہ آپ نون لیگیئیوں نے ڈسکشن فورم بھتے میں بھتہ خوروں کو دے دیا ہے

    مجھے تو اسوقت پتہ چلا جب اڈمن ڈسکشن فورم کی طرف سے ڈسکشن فورم کی تباہی و بربادی کا زمہ مسلم لیگ نون پر ڈالا جا رہا تھا

    میں نے غلطی سے جب حقائق بیان کرنے کے لیے کو ڑ ھیو ں اور بھتہ خوروں کے مکرو کردار کا ذکر کیا تو اڈمن جی اچانک اسقدر تلملا اٹھے کہ میرے کومنٹس پوسٹ کرنے کے فورا بعد منظر عام پر آئے اور جھولی اٹھا اٹھا کر مسلم لیگ نوں کو اور مجھے بد دعائیں اور طعنے دینے لگے

    میں تو اتنا گھبرا گیا کہ مجھے سمجھ نہیں آ رہی تھی کہ میں نے اڈمن جی کی شان میں کیا گستاخی کر دی ہے؟ اگر میں بھتہ خوروں اور کو ڑ ھیو ں کے بارے میں مزید کوئی کومنٹس لکھ بیٹھتا تو شاید اڈمن جی مجھے اور مسلم لیگ نون کو گالیاں ہی دینا شروع ہو جاتے یا بھی میری ٹارگٹ کلنگ کر دیتے

    میں نے چپ رہنے میں ہی عافیت سمجھی اور نیمہ نیمہ ہو کر وہاں سے نکل آیا

    😉 😉 😉 😉

  8. A L i Ch says:

    باوا بھائی جی میں نے بھی دیکھا تھا اور مجے ذاتی پر دکھ بھی ہوا تھا
    لگتا ہے ایڈمن صاحب مجبور ہیں اپنے دوستوں کے ہاتھوں
    میں یہ نہیں کہتا کہ یہ ویب سائٹ کس ہے یا کس کی نہیں
    لیکن اتنا ضرور کہ سکتا ہوں کہ ادمیں صاحب کے دوستوں میں ایم بخاری جیسے لوگ شامل ہیں
    مجے پہلی دفع پابندی کا سامنا اس وقت کرنا پڑا تھا جب ایم بخاری نے صحابہ اکرام کی شان میں گستاخی کی تھی
    میرے ہر کومنٹ کو ڈیلیٹ کیا گیا تھا
    ایڈمن صاحب اپ کو کم از کم مسلم لیگیوں کو جنکی نہیں کہنا چائیے تھا
    باوا بھائی جی اپنا تو دل بھر گیا ہے سیدھی سی بات ہے اس ویب سائٹ سے چلیں دیکھتے ہیں کتنے دن بسیرا رہتا ہے اس جگہ

  9. Bawa says:

    علی بھائی – آپکی بات درست ہے

    کسی اڈمن کو اپنے آپ کو اس حد تک نہیں گرانا چاہئیے کہ وہ کسی سیاسی جماعت کے خلاف خود پارٹی بن جائے اور اس قدر زہر اگلنے لگے

    ہر ویبسائیٹ یا فورم کے اڈمن اور موڈریٹر کا ایک احترام ہوتا ہے اور اسے پارٹی بن کر اپنا وہ احترام ختم نہیں کروانا چاہئیے

    آپکو یاد ہوگا کہ ڈسکشن فورم پر کو ڑ ھی اور بھتہ خور کس قدر غلیظ زبان استعمال کرتے رہے ہیں اور ہم نے ہمیشہ انہیں برداشت کیا ہے اور کسی کو اسکی زبان میں جواب نہیں دیا ہے

    ویسے بھی میرے تو کومنٹس مدتوں سے موڈریشن میں ہیں اور کوئی ایک دو فیصد ریلیز ہوتے ہیں اور وہ بھی چوبیس چوبیس گھنٹوں کے وقفوں سے. اگر اڈمن ڈسکشن جی کو میرا کو ڑ ھیو ں اور بھتہ خوروں کی حقیقت بیان کرنا اتنا ہی ناگوار گزرا تھا تو ان کومنٹس کو حسب سابق غائب کر دیتے. اسقدر بوکھلاہٹ میں سامنے آ کر مسلم لیگ نون کو برا بھلا کہنے کی کیا ضرورت تھی؟؟؟؟

    ایسا لگتا ہے کہ وہ کسی موقع کے انتظار میں تھے اور جیسے ہی انہیں موقع میسر آیا تو انہوں نے ایک لمحۂ کی تاخیر کیے بغیر مسلم لیگ نون کو رگید ڈالا

    اڈمن ڈسکشن کا یہ رویہ انتہائی افسوسناک اور قابل مذمت ہے

  10. mawan1971 says:

    باوا جی اس فرنٹ فورم پر تو گزارہ ہے مگراندر ڈسکش فورم بانگیں دے رہا ہے کئی بار تو گھنٹوں کوئی نیا کوممنٹ نہیں آتا -ہم نے بار ہا اڈمن سے درخواست کی کہ پرانے لوگوں سے بین ہٹا دیں مگر ان کے کانوں پر جوں نہیں رینگتی الٹا ایسا تھریڈ ہی ہٹا دیا جاتا ہے -جیسے عمران خان کی تحریک انصاف لیٹ ہو گئی ایسے ہی ہمارا فورم بھی لگتا ہے لیٹ ہوتا جا رہا ہے اور لوگ کسی اور فورم پر جانے لگے ہیں -ڈسکشن فورم پرتو انقلابیوں کی غیر موجودگی سے لے دے کر لندن والے پیر صاحب کے مرید ہی رہ گئے ہے ان سے ہی ہم ایک دو بار روزانہ لڑ جھگڑ کر سو جاتے ہیں مگر انقلابیوں کے ساتھ دنگل کا کچھ اور ہی مزہ تھا -لگتا ہے انقلابی کچھ مایوس بھی ہیں ورنہ سارے بین تو نہیں مگر بھولے سے بھی کوئی ادھر نہیں بھٹکتا –

    • Bawa says:

      السلام و علیکم اعوان بھائی جی – فرنٹ فورم پر خوش آمدید

      آپ درست کہہ رہے ہیں کہ ڈسکشن فورم اب دن بدن ویرانگی کا شکار ہوتا جا رہا ہے

      اڈمن یا موڈریٹر کا کام فورم کی ڈسکشن کو مونیٹر کرنا ہوتا ہے نہ کہ لوگوں کو بلاک کرکے اور طویل عرصے تک کڑی موڈریشن میں ڈال کر انہیں فورم چھوڑ کر جانے پر مجبور کرنا

      جہاں بھی کہیں مخالف نظریات کے حامل لوگ بحث کر رہے ہوں وہاں بعض اوقات بدمزگی کے بھی چانسز ہوتے ہیں اور اسی وقت اڈمن یا موڈریٹر کا رول اہم ہوتا ہے کہ وہ ڈسکشن کو اچھے طریقے سے ہینڈل کرے اور مسئلہ بننے والوں کو ایک یا دو وارننگ دینے کے بعد ایک مختصر عرصے کے لیے موڈریشن میں ڈال دے اور جب وہ ٹھنڈے ہو جائیں تو موڈریشن ختم کر دے یا دو تین بار موڈریشن میں ڈالنے کے بعد بھی اگر وہ رویہ نہ بدلیں تو انہیں پہلے عارضی اور پھر مستقل بین کر دے

      کسی پورے کے پورے گروپ کو بغیر کسی وارننگ کے بین کر دینا یا موڈریشن میں ڈال دینا اڈمن یا موڈریٹر کی نا اہلی کا ثبوت ہوتا ہے. موڈریٹر یا اڈمن کو اپنی نا اہلی کی سزا فورم ممبرز کو نہیں دینی چاہئیے. اگر وہ اپنی زمہ داریاں پوری نہیں کر سکتا تو اسے ان زمہ داریوں سے سبکدوش ہو جانا چاہئیے اور خزانے پر سانپ بن کر نہیں بیٹھے رہنا چاہئیے

      یہ ہمارا حوصلہ ہے کہ ہم اب تک اس ویبسائیٹ پر رکے ہوئے ہیں ورنہ یہاں جو رویہ روا رکھا جاتا ہے کوئی یہاں ایک منٹ رکنا پسند نہیں کرتا ہے. پرانے لوگوں سے واپس یہاں آنے کی بات کریں تو وہ کہتے ہیں کہ تم پاگل ہو جو اب تک وہاں رکے ہوئے ہو. دوسری ویبسایٹس اپنی ٹریفک میں اضافے کے لیے اور اپنی ریٹنگ بڑھانے کے لیے اپنے پرانے ممبرز کو عزت دیتی ہیں اور یہاں تو الٹی گنگا بہہ رہی ہے

      بھتہ خور اور کو ڑ ھیو ں سے ڈسکشن کا کوئی واقعی مزہ نہیں ہے کیونکہ سیاست میں اپنے مکرو کردار کا دفاع نہ کر سکنے کی وجہ سے انکے پاس گالی گلوچ کے سوا کچھ ہوتا نہیں ہے. انقلابی بچے تھوڑے مختلف ہیں. یہ بیچارے خیالوں کی دنیا میں بستے ہیں. اس لیے انہیں تنگ کرنے اور ان سے بحث کرنے کا مزہ آتا ہے. کبھی کبھار وہ بھی ہماری طنزیہ باتوں سے تنگ آ کر گالیوں پر اتر آتے ہیں لیکن جلد ہی انہیں احساس ہو جاتا ہے. بے چارے نئے نئے سیاست میں آئے ہیں اور انہیں بابے نیازی نے سبز باغ دکھائے ہوئے ہیں اس لیے انکی تخیل کی بلند پروازی قابل رشک ہے. زمینی حقائق سے بے خبر وہ بے چارے انٹرنیٹ پر بیٹھکر دنیا تسخیر کرنے نکلے ہیں. ہماری کوشش ہے کہ بلندی سے گرنے سے پہلے ہم انہیں زمین پر محفوظ لینڈنگ میں انکی مدد کر سکیں

  11. goodfriend says:

    رات کوخبر چل رہی تھی کہ چیف جسٹس نے سابق وزراۓ اعظم کے پروٹوکول کا نوٹس لے لیا
    اس سے پہلے بنجاب کے نگرانوں نے شریفوں کا صرف اضافی پروٹوکول واپس لیا ہےلہذا آزاد عدلیہ نے اس کے بدلے میں سابق وزراۓ اعظم کے پروٹوکول کا نوٹس لے لیاتاکہ شریف برادران خوش ہوں اور انصاف کا بول بالا ہو

  12. goodfriend says:

    دیواجی
    سج ہمیشہ کڑوا ہوتا ہے لیکن کبھی کبھی برداشت کر لینا جاہۓ لیکن آپ لوگوں میں اتنی جرائت نھیںد بیساکھیوں کے سہارا ھمیشہ آپ لوگوں نے لیا

  13. goodfriend says:

    دیوا جی
    یہ نہ سمجھ لینا میں پی پی پی کاسپورٹر ہوں صرف سچی بات کرتا ہوں شریفوں،زرداریوں اور خانوں پر لعنت بھجتا ہوں جو آپ جیسے جذباتی لوگں کو استعمال کرتے ہیں

  14. A L i Ch says:

    جیسے جیسے الیکشن قریب آ رہے ہیں، عمران خان اپنا زہنی توازن کھو رہا ہے۔ خان صاحب اب بیرونِ ملک پاکیستانیوں سے کہ رہے ہیں کہ
    اپنی پوری فیملی سمیت پاکیستان آؤ تاکہ نیا پاکیستان بن سکے ۔۔لول

    [img]https://fbcdn-sphotos-a-a.akamaihd.net/hphotos-ak-ash3/562366_406565199442038_973870658_n.jpg[/img]

  15. Bawa says:

    [img]http://jang.com.pk/jang/apr2013-daily/15-04-2013/updates/4-15-2013_143255_1.gif[/img]
    .
    .

    لکھ دی لعنت دھماکہ کرنے والوں پر

    لا لاں جوتی تے پا لاں لمبیاں

    :) :) 😀 😀

  16. Bawa says:

    بم بوسٹن میں پھٹا ہے اور اس ویبسائیٹ پر حرامی لبرلز کی پھٹی پڑی ہے

    کیا کسی لبرلزم کے مامے کو تین دن پہلے ان معصوم اور بے گناہ بچوں کو مارنے پر بھی افسوس ہوا تھا؟
    .
    .
    [img]http://e.jang.com.pk/04-08-2013/pindi/images/65.gif[/img]

  17. Bawa says:

    یہ سب انتخابات ملتوی کرانے کی سازش لگتی ہے
    .
    .
    [img]http://jang.com.pk/jang/apr2013-daily/16-04-2013/updates/4-16-2013_143348_1.gif[/img]

  18. mhansari says:

    Judicial abuse occurs when judges substitute their own political views for the law.

    Pakistan’s history has witnessed these judicial abuses from Justice Muneer to Justice Mushtaq, and from Justice Anwarul Haque to Justice Iftikhar Chaudry.

  19. mhansari says:

    اکبر الہ آبادی اور وکیل۔۔۔۔۔

    پتہ نہیں اکبر کا وجدان تھا یا ان ذاتی تجربہ جس نے انہیں یہ معرکۃ الارا شعر لکھنے پر مجبور کیا۔

    ،پیدا ھوئے وکیل تو شیطان نے کہا
    لو آج ھم بھِی صاحب اولاد ھو گئے۔

    مدتیں ھو گئیں جب یہ شعر پہلی بار نظر سے گذرا تھا تو اسے محض ایک بذلہ سنجی سمجھ کر نظر انداز کر دیا تھا۔ لیکن آج جو کچھ وکلا اور ججز کے ہاتھوں انصاف اور انسانیت کی تذلیل ھو رھی ھے تو اس شعر کی عظمت کا احساس ھوتا ھے کہ ایک جہان معنی پنہاں ھیں اس بظاہر بے ضرر سے شعر میں۔ شیطان کی صفات سے وکیلوں کی شجر کاری اور وکیلوں کی معراج ھے جج بن جانا تو گویا سونے پر سہاگہ، کریلا اور نیم چڑھا، کتنی تخم ریزی ھو تو جج پیدا ھوتا ھے اس کی جمع تفریق کرنا زیادہ مشکل نہیں ھے۔ اور پھر شیطان جیسی اعلی صفات کی پیوند کاری کا شاہکار وکیل اور اس کی انتہا ایک جج۔ شیطان بھی اپنی اس معراج پر فخر تو ضرور کرتا ھوگا۔

    مشتاق احمد یوسفی کا ایک کردار اپنے بچحے کو ‘تخمیر’ کے نام سے پکارتا ھے۔ وجہ معلوم کی تو بولا کہ تخم خنزیر کہنا کافی لمبا لگتا تھا، پیار سے تخمیر کہہ لیتا ھوں۔ تو ان شییطانوں کے ٹولے کو ھم بھی پیار سے تخمیر کہہ لیا کریں تو اسم با مسمیِ ھو جائِں گے۔ بد کرداری ملاحظہ ھو کہ وکلا بھری عدالت میں سیشن جج کے منہ پر تھپڑ رسید کر دیں، عدالت میں توڑ پھوڑ کردیں، سائلین کو وکلا کے گروہ کے گروہ عدالت میں مارنا شروع کرد یں، اور انتہا تو یہ کہ انکم ٹیکس کے آفس میں ‘وکلا گینگ’ انکم ٹیکس آفیسر سے ناجائز کام نہ کروا سکنے پر اس کو مارنا شروع کر دے۔ قانون اور تعلیم یافتہ ھونے کا دعوی اور کام وہی شیطانی۔ ججز ان سے بھی دو قدم آگے۔ شاہ زیب قتل کیس، نیب آفیسر کا قتل، سلمان تاثیر کا قاتل رنگے ہاتھوں گرفتار لیکن فیصلے کرتے ھوئے انصاف کے رکھوالوں کی موت واقع ھو رھی ھے۔ ھاں سیاست کا اتنا شوق کے چاہتے ہیں کہ ان کے عدالتی تبصروں کے ٹکرز ٹی وی پر چلتے رھیں، کوئ نہ کوئ تبصرہ ایسا ہر روز فرما دیا جاتا ھے جس سے سیا سی طور پر زندہ رہ سکیں۔ سیاسی طور پر اس لئے کہ ان پی سی او ھلف یافتہ ججوں کا کوئی اخلاقی جواز تو ھے نہیں۔ جس مشرف کو گرفتار کر کے، اس کی تذلیل کر کے بغلیں بجا رھے ہیں کل اسی کے سامنے ہاتھ باندھے ان ججوں کی حلف برداری کی تصاویر میڈیا میں بھری پڑی ھیں، لیکن یہ اپنے پالتو وکلا کے ساتھ مل کر آزاد عدلیہ کا سوانگ رچا رھے ھیں۔ سوموٹو نوٹس لینے کا ایسا شوق کہ دو شراب کی بوتلیں بر آمد ھونے پر چیف صاحب کی مسلمانی بیدار ھو جاتی ھے شھر شھر شراب خانے جو کھلے ھیں وہ ان کی بھینگی نظر کی وجہ سے شاید اوجھل ھیں آنکھوں سے۔

    اکبر الہ آبادی آج زندہ ھوتے تو شاید اپنے شعر میں انہیں ترمیم کرنا پڑتی اور شیطان ابن شیطان، ابن شیطان کے بارے میں شعر لکھنا پڑتا۔

    بہرحال شیطان ‘دادا’ بن گیا۔ اس کو مبارک ھو۔

Leave a Reply